میری پہلی ای بک کے بارے میں ۔ ۔ ۔

میری پہلی ای بک کے بارے میں ۔۔۔۔۔

میرا لکھنے کا نثری و شاعری سفر اللہ کی کرم نوازی سے جاری و ساری ہے۔ تحاریر لکھتے لکھتے میں کتاب کی جانب بڑھ گئی۔ چاند اور صحرا ہلکے پھلکے مضامین کی کتاب کے ساتھ  میں نے سفر ٹورنٹو کینیڈا کا ۔۔۔ کا سفر نامہ  لکھا۔ شاعری بھی لکھی۔ میڈیا اتنا سٹرونگ اور فاسٹ نہ ہوتا تو یقینا ہارڈ کاپی کے لیے پبلشر تک رجوع  لازمی ہونا تھا۔ لیکن آن لائن پڑھنے والے کرم فرماؤں کی بدولت ۔۔ ای بکس ۔۔۔ میرے لیے کافی مددگار ثابت ہوئیں۔ کئی آن لائن  لائبریریز میں میری دونوں کتابیں پہنچیں۔ بلاگز میں رکھی گئیں۔ جن کا بہت اچھا رسپانس ملا۔ اس کے ساتھ ساتھ  اب میں پبلشرز سے بھی رجوع کر رہی ہوں۔ انشاءاللہ ایک نہ ایک دن میری پبلش کتاب بھی ان قارئین کے لیے موجود ہو گی۔ جنہیں کمپیوٹر پر آن لائن پڑھنے کی سہولت میسر نہیں یا وہ کتاب کو ہاتھ میں لے کر محسوس کر کے پڑھنا چاہیں گے۔۔ کبھی اسے کافی ٹیبل، بک ریکس کی زینت بنائیں گے تو کبھی اپنے تکیے کے نیچے دبائیں گے۔ لیکن ماسواء ان باتوں کے مجھے اپنی پہلی ای بک ہمیشہ یاد رہے گی۔ جسے تیار کرنے اور اس طرف میرا دھیان کروانے میں کراچی کی سائرہ علی  کا بہت بڑا ہاتھ ہے۔ جو ہمیشہ میری تحاریر پسند کرنے کے علاوہ پوچھا کرتی تھی کہ آپ کی کتاب کب آ رہی ہے ؟ سمجھ لیں وہی میرے کتابی سلسلے کی حرف اول ہے۔ اور یہ ای بک تیار بھی اسی نے کی ہے۔ حالانکہ ای بک بنانے کے لیے اسکی بھی یہ پہلی کاوش تھی۔ ہم دونوں نے نے اسے ون اردو فورم کی سالگرہ کے لیے بطور خاص پلان کیا۔ صرف دس دن کا محدود وقت ہمارے پاس تھا۔ جس میں کراچی کی لوڈ شیڈنگ کا بھی بڑا ہاتھ تھا۔ کچھ نئے آئیڈیاز بھی اسے تیار کرنے میں استعمال کیے گئے۔ سو کام زیادہ تھا وقت کم  اور مقابلہ سخت۔۔۔ لیکن اللہ کی مہربانی سے بروقت یہ کام ہم نے نپٹا ہی لیا۔ خیال تھا بلکہ ہم دونوں کو ہی امید واثق تھی کہ افراتفری اور پہلی بار کے چکر میں کچھ کمی اورغلطیوں کا سامنا ہو گا۔ لیکن اک دباؤ میں بھی کام کا معیار اچھا رہا۔ اور میری تحاریر ایک خوبصورت ای بک کی صورت میرے سامنے مجھے ہی حیران کر رہی تھیں۔ پھر ہماری رائٹر سوسائیٹی کی قابل صدر رافعہ خان  نے ون اردو سالگرہ پر ای بک کی اوپننگ کی۔ اور پڑھنے والوں کی ڈھیروں تعریف و توصیف  ہم تک پہنچی۔ اب میں لکھنے کے سفر میں آگے ضرور بڑھ گئی ہوں اور اس کتاب کا اضافہ شدہ ایڈیشن بھی پڑھنے والوں کے سامنے اک نئی جدت اور اضافے سے آ چکا ہے لیکن یہ پہلی ای بک مجھے ہمیشہ یاد رہے گی اور ان لمحات کو بھی یاد دلاتی رہے گی۔ تو آج اس تمہید کے توسط سے ایک بار پھر سائرہ علی کی بہت شکر گزار ہوں۔ جس کی بدولت اتنی خوبصورت ای بک بن پائی۔

اس  ای بک کا لنک پیش ہے۔ آپ بھی پڑھیے۔۔۔ بہتر رزلٹ کے لیے کتاب کو ڈاؤن لوڈ کر کے پڑھا جا سکتا ہے۔ شکریہ

http://www.mediafire.com/view/?vx6xzw8i5xi34z9

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s